Song no:

7

Volume no:

3

Poet Name:

Munir Arzoo

Company:

Sonic

Song Name:

Tum Ko Shorat Ho Mubarak

اے  زندگی   اِک   بار   توں   نزدیک  آ  تنہا  ہوں  میں
یا  دُور  سے   پھر دے  مجھے کوئی صدا  تنہا  ہوں  میں

دُنیا  کی محفل میں کہیں  میں  ہوں  بھی  یا  شاید  نہیں
اِک  عمر سے اِس  سوچ  میں  ڈُوبا  ہوا  تنہا  ہوں  میں

تُم  کو  شہرت  ہو  مبارک  ہمیں  رسوا  نہ  کرو
کتنے  بدل   گے    ہیں  وہ   حالات   کی  طرح
جب  بھی   ملے   وہ   پہلی   ملاقات کی  طرح

ہم  کیا  کسی  کے   حُسن  کا  صد قہ   اُتارتے
اِک   زِندگی    ملی   بھی  تو  خیرات  کی  طرح


تم  کو   شہرت  ہو   مبارک   ہمیں   رسوا   نہ  کرو
خود  بھی  بک  جاؤ  گے  اِک  روز  یہ  سود ا  نہ  کرو


شوق   سے   پردہ  کرو   پردہ   ہے   واجب   لیکن
میری   قسمت   کے  اندھیروں  میں  اضافہ  نہ  کرو


چوم  لینے  دو  رخ  یار  کو  جی   بھر   کے    ہمیں
زندگی  پیار  ہے  تُم    پیار    سے    روکا    نہ  کرو


کوششیں  کرنے  سے  حالات   بدل  جاتے   ہیں
خود  بگاڑ   ہوئی  تقدی   کا شکوہ  نہ  کرو


بندگی  ہی  سے   تو    ہے    بندہ    نوازی   اُن  کی
بعض  نادان  یہ   کہتے   ہیں  کہ   سجدہ  نہ   کرو

عرش   پہ   خاک    نشین    نوں    کا    بسیرہ   توبہ
جو  نہ   پوری   ہو  کبھی    ا
یسی    تمنا   نہ   کرو

حُسن  کو  تُم  نے خدا سمجھا  ہے   لیکن   اے   مُنیر
خود   بنائے    ہوئے    معبو د  کی    پُوجا    نہ  کرو